Connect with us

انٹرنیشنل

امریکہ میں KFC نے نباتات سے تیار کردہ فرائیڈ چکن پیش کردیا

Published

on

واشنگٹن (انٹرنیشنل ڈیسک)
امریکہ میں KFC نے نباتات سے تیار کردہ فرائیڈ چکن پیش کردیا ہے.اطلاعات کے مطابق کینٹکی فرائیڈ چکن KFC نےامریکی ریستورانوں میں نباتات سے تیار کردہ فرائیڈ چکن بطور متبادل فروخت کرنا شروع کردیا ہے۔ یہ اقدام ماحولیات سے متعلق بڑھتی ہوئی آگاہی کی عکاسی کرتا ہے۔

کے ایف سی کا کہنا ہے کہ نئے کھانے کی فہرست پیر کے روز سے ملک بھر کی تقریباً چار ہزار کے ایف سی شاخوں پر محدود مدت کیلئے دستیاب ہے۔ فاسٹ فُوڈ کی اس امریکی کمپنی نےکیلیفورنیا میں قائم اسٹارٹ اپ بیونڈ میٹ کے ساتھ ملکر مٹر اور دیگر اجزاء کی پروٹین سے، یہ متبادل گوشت تیار کیا ہے۔

کے ایف سی نے سب سے پہلے 2019ء میں ذائقہ چکھنے کے تجربہ کے طور پر محدود پیمانے پر جارجیا میں یہ شے متعارف کروائی تھی۔ 2020ء میں کے ایف سی نے اس تجربے کو کیلیفورنیا اور دیگر ریاستوں تک پھیلایا اور دیکھا کہ یہ متبادل گوشت مصنوعات مقبول ہوئیں۔ اطلاعات کے مطابق، نباتات سے تیار کردہ متبادل گوشت، نتیجتاً گوشت کے مقابلے میں گرین ہاؤس گیسوں کا اخراج کم کرتا ہے جس کیلئے مال مویشی کی پرورش کرنا پڑتی ہے۔

جرمن تحقیقی کمپنی اسٹاٹِسٹا کے تخمینے کے مطابق، 2026ء میں نباتات سے تیار کردہ متبادل گوشت کی عالمی منڈی تقریباً 16 ارب ڈالر مالیت کی ہوگی۔

انٹرنیشنل

اسرائیلی فوج کی فائرنگ میں مزید 7 فلطسینی شہید

Published

on

غزہ: (صدائے روس)مغربی کنارے میں اسرائیلی فوج نے ایک علاقے میں چھاپہ کار کارروائی کے دوران فائرنگ کرکے 7 فلسطینی نوجوانوں کو شہید کردیا۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق مغربی کنارے کے علاقے جیریکو کے پناہ گزین کیمپ میں اسرائیلی فوج نے علی الصبح چھاپہ مارا اور سرچ آپریشن کے دوران فائرنگ کرکے 7 نوجوانوں کو شہید کردیا۔

اسرائیلی فوج کی اس جارحیت میں 3 فلسطینی نوجوان زخمی بھی ہوئے جن میں سے دو کی حالت نازک بتائی جا رہی ہے۔ زخمی انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں زیر علاج ہیں۔
اسرائیلی فوج کے ترجمان کا کہنا ہے کہ اس علاقے میں مسلح نوجوانوں نے 28 جنوری کو چیک پوسٹ پر حملہ کیا تھا جن کی گرفتاری کے لیے آج جانے والی ٹیم پر بھی فائرنگ کی گئی۔

اسرائیلی فوج نے دعویٰ کیا کہ دفاعی فائرنگ میں دو حملہ آوروں سمیت 7 افراد مارے گئے مارے جانے والے نوجوانوں کا تعلق حماس سے تھا اور وہ اس علاقے کے اہم عہدیدار تھے۔

دوسری جانب حماس نے اسرائیل کے اس اقدام کو بزدلانہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ فلسطینیوں کی نسل کشی کا بھرپور جواب دیا جائے گا۔

ادھر قابض اسرائیلی فوج نے مغربی کنارے کے ایک اور علاقے میں چھاپہ مار کارروائی کے دوران 48 سالہ خاتون کو حراست میں لیکر نامعلوم مقام پر منتقل کردیا۔

واضح رہے کہ رواں برس کے آغاز سے اب تک اسرائیلی فوج کی جارحیت میں شہید ہونے والے نوجوانوں کی تعداد 43 ہوگئی جن میں 8 بچے شامل ہیں۔

Continue Reading

ٹرینڈنگ