Connect with us

انٹرنیشنل

قازقستان نے بھارت، ایران اور چین کے شہریوں کو ویزا فری انٹری دیدی

Published

on

قازقستان نے بھارت، ایران اور چین کے شہریوں کو ویزا فری انٹری دیدی

قازقستان نے بھارت، ایران اور چین کے شہریوں کو ویزا فری انٹری دیدی

آستانہ (صداۓ روس)
قازقستان کی وزارت داخلہ نے کہا کہ قازقستان نے ہندوستان، ایران اور چین کے شہریوں کو بغیر ویزا کے 14 دن تک ملک میں رہنے کا حق دیا ہے۔ وزارت نے ایک بیان میں کہا کہ 8 جولائی 2022 سے، قازقستان یکطرفہ طور پر ہندوستان، ایران اور چین کے شہریوں کے لیے ویزا فری نظام کھول رہا ہے۔ 14 دن کا ویزہ فری قیام ذاتی، کاروباری اور سیاحتی مقاصد کے لیے سفر کی اجازت دیتا ہے۔ ویزا فری قیام ہر 180 دنوں کے دوران کل 42 دن نہیں رہ سکتا۔
اس خصوصی ویزا فری ٹریول کے دوران کام یا کوئی دوسری سرگرمی جس سے آمدن آ سکے ممنوع ہے۔

یاد رہے اس سب قبل قازقستان کے صدر قاسم جومارت توکایف نے تہران میں ایرانی صدر ابراہیم رئیسی سے ملاقات کے دوران کہا تھا کہ قازقستان کے حکام نے ایرانی شہریوں کے لیے 14 دنوں کے لیے ویزا فری نظام متعارف کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ توکایف نے بتایا کہ ہم ایرانی شہریوں کے لیے 14 دنوں کے لیے ویزا فری نظام متعارف کروا رہے ہیں۔ اس اقدام کا مقصد مختلف شعبوں میں تعاون کو مزید وسعت دینا ہے، خاص طور پر کاروباری برادری کے نمائندوں کے درمیان رابطوں کو تیز کرنا، سیاحوں کی ایک بڑی تعداد کو راغب کرنا۔ انہوں نے مزید کہا کہ مجھے یقین ہے کہ ایرانی تاجر اس سہولت کو پوری طرح استعمال کریں گے.

انٹرنیشنل

یوکرین کے فوجی وفد کا خفیہ دورہ اسرائیل

Published

on

یوکرین کے فوجی وفد کا خفیہ دورہ اسرائیل

یوکرین کے فوجی وفد کا خفیہ دورہ اسرائیل

کیف (انٹرنیشنل ڈیسک)
رپورٹ کے مطابق اسرائیلی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ پیر کی رات یوکرین کا ایک فوجی وفد خفیہ طور پر اسرائیل پہنچا جہاں اس نے اسرائیل کے اعلی فوجی حکام سے ملاقات کی۔ اسرائیل کے چینل 13 کا کہنا ہے کہ اسرائیلی حکام نے روس کے ساتھ کشیدگی نہ بڑھنے کے پیش نظر یوکرین کے فوجی وفد کے دورے کو خفیہ رکھا ہے۔ یوکرین کے فوجی وفد کے دورے کی مزید تفصیلات سامنے نہیں آئی ہیں۔ ماسکو اور تل ابیب کے تعلقات اسرائیل کی جانب سے جنگ یوکرین میں یورپ کی حمایت کی وجہ سے کشیدہ ہو گئے۔

یوکرائنی حکام کے مبینہ دورہ اسرائیل کا مقصد یوکرین کے میزائل ڈیفنس کو قبل از وقت وارننگ سسٹم فراہم کرنا تھا۔ اس کے علاوہ یوکرین کے وفد نے فوجی امداد کی درخواست کی ہوگی۔ اس دورے کے دوران یوکرینی وفد کی اسرائیلی فوجی اور دفاعی حکام کے ساتھ ملاقاتیں ہوئیں۔ اس سے پہلے 16 اکتوبر 2022 کو اسرائیل کے وزیر برائے تارکین وطن امور نخمان شائی نے اسرائیلی حکومت سے یوکرین کو فوجی امداد فراہم کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔ تاہم 19 اکتوبر 2022 کو اسرائیلی وزیر دفاع بینی گانٹز نے دعویٰ کیا کہ اسرائیل یوکرین کو ہتھیار فروخت نہیں کرے گا۔

Continue Reading

ٹرینڈنگ