ہومانٹرنیشنلامریکی شہری 100 ڈالر کے کرنسی نوٹ سے خوفزدہ ہونے لگے

امریکی شہری 100 ڈالر کے کرنسی نوٹ سے خوفزدہ ہونے لگے

امریکی شہری 100 ڈالر کے کرنسی نوٹ سے خوفزدہ ہونے لگے

ماسکو (انٹرنیشنل ڈیسک)
امریکہ میں ١٠٠ ڈالر کا نوٹ سب سے زیادہ استعمال ہوتا ہے لیکن اسی نوٹ سے امریکی لوگ پریشان ہیں۔ امریکی اخبار وال اسٹریٹ جرنل نے ایک رپورٹ شائع کی ہے جس کے مطابق امریکہ میں ١٠٠ ڈالر کا نوٹ بہت عام ہے لیکن اب اسی نوٹ سے لوگ پریشان ہونے لگے ہیں۔وال اسٹریٹ جرنل نے رپورٹ میں لکھا ہے کہ امریکی معاشرے میں ١٠٠ ڈالر کا نوٹ بے حد عام ہے اور امریکی مرکزی بینک فیڈرل ریزرو کے اعداد و شمار کے مطابق سنہ٢٠١٢ اور ٢٠٢٢ کے درمیان ١٠٠ ڈالر کے نوٹوں کی گردش دگنی سے بھی زیادہ ہو گئی۔ اعداد و شمار کے مطابق سنہ ٢٠١٢ میں ٨ اعشاریہ ٦ ارب ڈالر کے ١٠٠ نوٹ گردش میں تھے، سنہ ٢٠٢٢ میں ان کی تعداد بڑھ کر ١٨ اعشاریہ ٥ ارب ہو گئی۔

لوگوں میں اتنا رائج ہونے کے باوجود، ١٠٠ ڈالر کا نوٹ خرچ کرنا بہت مشکل ہے۔ اس کی بھی ایک وجہ ہے اور وہ یہ کہ زیادہ تر دکاندار ١٠٠ ڈالر کا نوٹ لینے سے انکار کر دیتے ہیں۔ دوسری وجہ ١٠٠ ڈالر کے نقلی نوٹ ہیں۔ ١٠٠ ڈالر کے نوٹ اندھا دھند بازار میں آ رہے ہیں۔ دکاندار ان نوٹوں کو قبول کرنے سے پہلے کئی بار چیک کرتے ہیں۔

ان سب مسائل کے پیش نظر اب صورت حال یہ ہے کہ ماہرین اقتصادیات نے ١٠٠ ڈالر کے نوٹوں کی چھپائی کم کرنے کی اپیل بھی کردی ہے۔

Facebook Comments Box
انٹرنیشنل

2 تبصرے

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں